آخر کب تک، Akhir kab tak

مذہب کارڈ

………
پاکستان تحریک انصاف کی گزشتہ حکومت میں ملک بند کرنے والی چند مذہبی وسیاسی جماعتیں جنہوں نے ہمیشہ مذہب کارڈ استعمال کیا وہ بھارت میں نبی کریمﷺ کی شان میں (نعوذباللہ) تیسری مرتبہ گستاخی اورسویڈن میں (نعوذباللہ) قرآن کی بے حرمتی کے واقعات پراب ان ممالک کے سفیروں کوبے دخل اورتعلقات ختم کرنے کا مطالبہ کیوں نہیں کررہی

کیا اس وقت وہ ساری جماعتیں سالانہ چھٹیوں پرہیں یا ایسے مطالبات صرف تحریک انصاف حکومت میں ہی کرنے تھے یا تحریک انصاف کی حکومت کوبدنام کرنا مقصد تھا،،،آج پوری دنیا کے دو ارب مسلمان سراپا احتجاج ہیں لیکن بدقسمتی سے پاکستان کی چند مذہبی جماعتیں اس حوالے سے سوئی ہوئی ہیں کیا یہ دہرا معیارنہیں ؟ یہی وجہ ہے کہ مذہب کارڈ کا استعمال کرنے والی جماعتوں کوپنجاب کے ضمنی الیکشن اورکراچی کے این اے245کی عوام نے بری طرح مسترد کردیا تھا،،

عمران خان اپنی حکومت اوراس سے پہلے بھی باربارآوازبلند کرتے رہے کہ ہمیں اپنے ملک میں جلاؤ،گھیراؤکرنے کے بجائے عالمی سطح پرمل کراسلاموفیوبیا کیخلاف آوازبلند کرنا ہوگی لیکن اس وقت عمران خان کی باتوں پرعمل کرنے کے بجائے انہیں بدقسمتی سے یہودیوں کا ایجنٹ تک کہا گیا اورپورے ملک کوجام اوراپنے ہی ملک کی املاک کوجلایا گیا جس سے ملکی معیشت کواربوں کا نقصان پہنچا اورپوری دنیا میں پاکستان کی بدنامی ہوئی

درحقیقت سابق وزیراعظم عمران خان وہ پہلے شخص تھے جنہوں نے اقوام متحدہ میں اسلامو فوبیا کا مسئلہ جنرل اسمبلی میں 2019 میں اپنے پہلے ہی خطاب میں اٹھایا اور اس سے نمٹنے کیلئے بین الاقوامی توجہ اور کوششوں کا بار بارمطالبہ کیا اورقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے پندرہ مارچ کو اسلامو فوبیا سے نمٹنے کے لئے عالمی دن کے طور پر منانے کی قرارداد بھی منظورکی ،اسلامو فوبیا کے خلاف عالمی دن منانے سے رواداری، پرامن بقائے باہمی اور بین المذاہب اور ثقافتی ہم آہنگی کے پیغام کو فروغ دینے ،بڑھتے ہوئے اسلامو فوبیا اور مسلم مخالف نفرت کے بارے میں بین الاقوامی سطح پر شعور اجاگر ہوگا جس کا مقصد عالمی سطح پر رواداری اور امن کے کلچر کو فروغ دینا ہے۔،،،،

عمران خان کی گزشتہ حکومت نے اسلاموفوبیا کے تدارک کے لیے ہرفورم پر آواز اٹھائی جس کا اعتراف مسلم ممالک کے سربراہان اوربشمول خصوصا روسی صدر ولادی میرپیوٹن اورکنیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے بھی کیا اورانہوں نے خود بھی اسلاموفوبیا کے تدارک کے لیے آواز اٹھائی اور عمران خان کے اقدامات کو سراہا۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

About admin

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

x

Check Also

آخر کب تک، Akhir kab tak

کاش ایسا ہو جائے

تحریر شہباز ملک ایک طرف سیلاب سے پاکستان کے متعدد شہرڈوبے ہوئے ہیں اورسیلاب متاثرین ...

%d bloggers like this: